قُرآنِ پاک میں بیان کردہ شخصی اوصاف میں سے چند ایک ، اختصار کے ساتھ، حصہ سولہواں

A little effort to put down some good qualities of a character, described by the Holy Qura’an.

-پارہ 16:

– -1ہدایت کی آرزو کرنا اور اچھے کاموں کی کوشش کرنی چاہئے

-القرآن/سورۃ مریم/76/

وَيَزِيدُ اللَّهُ الَّذِينَ اهْتَدَوْا هُدًى ۗ وَالْبَاقِيَاتُ الصَّالِحَاتُ خَيْرٌ عِندَ رَبِّكَ ثَوَابًا وَخَيْرٌ مَّرَدًّا

-ترجمہ: اور جو لوگ ہدایت پر ہیں الله انہیں زیادہ ہدایت دیتا ہے اور باقی رہنے والی نیکیاں تیرے رب کے نزدیک ثواب اور انجام کے لحاظ سے بہت ہی بہتر ہیں۔

-2- ایمان اور نیک کام کرنے پر وِد/مودت/محبت کا انعام عطا کیا جائے گا۔

القرآن/سورۃ مریم/96/

إِنَّ الَّذِينَ آمَنُوا وَعَمِلُوا الصَّالِحَاتِ سَيَجْعَلُ لَهُمُ الرَّحْمَٰنُ وُدًّا

-ترجمہ: بے شک جو ایمان لائے اور نیک کام کیے عنقریب رحمان ان کے لیے محبت پیدا کرے گالاشبہ جو لوگ ایمان لائے اور انہوں نے اچھے کام کیے الله تعالیٰ ان کے لیے محبت پیدا کر ے گا

3-شرحِ صدر کی دعا کرنی چاہئے

القرآن/سورۃ طہٰ/25/26/27/28/

-قَالَ رَبِّ اشْرَحْ لِي صَدْرِي۔ وَيَسِّرْ لِي أَمْرِي۔ وَاحْلُلْ عُقْدَةً مِّن لِّسَانِي۔ يَفْقَهُوا قَوْلِي۔

-ترجمہ: (موسیٰ نے) کہا اے میرے رب میرا سینہ کھول دے۔اورمیرا کام آسان کر۔اور میری زبان سے گرہ کھول دے۔کہ میری بات سمجھ لیں۔

-4- نیک کام کرنے والے خوفزدہ نہیں رہتے۔ نیک کاموں کو اپنایا جائے تو خوف سے بچا جا سکتا ہے۔

وَمَن يَعْمَلْ مِنَ الصَّالِحَاتِ وَهُوَ مُؤْمِنٌ فَلَا يَخَافُ ظُلْمًا وَلَا هَضْمًا

ترجمہ: اور جو نیک کام کرے گا اور وہ مومن بھی ہو تو اسے ظلم اور حق تلفی کا کوئی خوف نہیں ہو گا

Part 16:

1- One must seek guidance, as guidance and good deeds last forever and best in respect of return.

Al Quran/Maryam/76/And Allah increases in guidance those who go aright; and ever-abiding good works are with your Lord best in recompense and best in yielding fruit.

2- Allah’s love is blessed on doing righteous deeds and on believing in Allah.

Al Quran/ Maryam /96/Lo! Those who believe and do good works, the Beneficent will appoint for them love.

3-One is taught to pray for openness of heart and mind. Allah tells Moses’ words.

Al Quran/Taa haa/25, 26, 27, 28/ (Moses) said: “O my Lord! Open for me my chest (grant me self-confidence, contentment, and boldness). “And ease my task for me; and loose the knot (the defect/ impediment) from my tongue, (i.e. remove the incorrectness from my speech) [That occurred as a result of a brand of fire which Musa (Moses) put in his mouth when he was an infant]. (Tafsir At-Tabari). “That they understand my speech.

4-Good deeds bring strength and belief.

Al Quran/Taa haa/112/And whoever does good works and he is a believer, he shall have no fear of injustice nor of the withholding of his due.

Advertisements

15th Part, A glimpse of character sketch from Quran

15th Part, A glimpse of character sketch from Quran

قُرآنِ پاک میں بیان کردہ شخصی اوصاف میں سے چند ایک ، اختصار کے ساتھ

A little effort to put down some good qualities of a character, described by the Holy Qura’an.

-پارہ 15:

-1-بےجا خرچ کی بجائے قرابت داروں، مساکین اور مسافر کا خیال رکھا جائے۔

-القرآن/الاسراء/26

-وَآتِ ذَا الْقُرْبَىٰ حَقَّهُ وَالْمِسْكِينَ وَابْنَ السَّبِيلِ وَلَا تُبَذِّرْ تَبْذِيرًا

ترجمہ: اور رشتہ دار اور مسکین اور مسافر کو اس کا حق دے دو اور مال کو بے جا خرچ نہ کرو

-2-ناپ تول میں ایمانداری

-القرآن/الاسراء/35

– وَأَوْفُوا الْكَيْلَ إِذَا كِلْتُمْ وَزِنُوا بِالْقِسْطَاسِ الْمُسْتَقِيمِ ۚ ذَ‌ٰلِكَ خَيْرٌ وَأَحْسَنُ تَأْوِيلًا

-ترجمہ: اور ناپ تول کر دو تو پورا ناپو اور صحیح ترازو سے تول کر دو یہ بہتر ہے اور انجام بھی اس کا اچھا ہے

-3-غیریقینی بات اور ناقص معلومات کی بنیاد پر کوئی موقف نہ لیا جائے

القرآن/الاسراء/36/ وَلَا تَقْفُ مَا لَيْسَ لَكَ بِهِ عِلْمٌ ۚ إِنَّ السَّمْعَ وَالْبَصَرَ وَالْفُؤَادَ كُلُّ أُولَـٰئِكَ كَانَ عَنْهُ مَسْئُولًا

-ترجمہ: اورجس بات کی تجھے خبر نہیں اس کے پیچھے نہ پڑ بے شک کان اورآنکھ اور دل ہر ایک سے باز پرس ہو گی

-4-غرور نہ کیاجائے اور اپنی چال ڈھال میں عاجزی اختیار کی جائے۔

-القرآن/الاسراء/37/ وَلَا تَمْشِ فِي الْأَرْضِ مَرَحًا ۖ إِنَّكَ لَن تَخْرِقَ الْأَرْضَ وَلَن تَبْلُغَ الْجِبَالَ طُولًا

-ترجمہ: اور زمین پر اتراتا ہوا نہ چل بے شک تو نہ زمین کو پھاڑ ڈالے گا او رنہ لمبائی میں پہاڑوں تک پہنچے گا

-5-اچھی اور مثبت بات کی جائے، غلط بات کے ذریعے شیطان اختلافات اور ناچاقیاں پیدا کرنے کی کوشش کرتا ہے۔

-القرآن/الاسراء/53/ وَقُل لِّعِبَادِي يَقُولُوا الَّتِي هِيَ أَحْسَنُ ۚ إِنَّ الشَّيْطَانَ يَنزَغُ بَيْنَهُمْ ۚ إِنَّ الشَّيْطَانَ كَانَ لِلْإِنسَانِ عَدُوًّا مُّبِينًا

ترجمہ: اور میرے بندوں سے کہہ دو کہ وہی بات کہیں جو بہتر ہو بےشک شیطان آپس میں لڑا دیتا ہے بے شک شیطان انسان کا کھلا دشمن ہے

-اللہ کے بندوں کاساتھ اپنایا جائے

-القرآن/الکھف/28/ وَاصْبِرْ نَفْسَكَ مَعَ الَّذِينَ يَدْعُونَ رَبَّهُم بِالْغَدَاةِ وَالْعَشِيِّ يُرِيدُونَ وَجْهَهُ ۖ وَلَا تَعْدُ عَيْنَاكَ عَنْهُمْ تُرِيدُ زِينَةَ الْحَيَاةِ الدُّنْيَا ۖ وَلَا تُطِعْ مَنْ أَغْفَلْنَا قَلْبَهُ عَن ذِكْرِنَا وَاتَّبَعَ هَوَاهُ وَكَانَ أَمْرُهُ فُرُطًا

-ترجمہ: تو ان لوگو ں کی صحبت میں رہ جو صبح اور شام اپنے رب کو پکارتے ہیں اسی کی رضا مندی چاہتے ہیں اور تو اپنی آنکھوں کو ان سے نہ ہٹا کہ دنیا کی زندگی کی زینت تلاش کرنے لگ جائے اور اس شخص کا کہنا نہ مان جس کے دل کو ہم نے اپنی یاد سے غافل کر دیاہے اور اپنی خواہش کے تابع ہو گیا ہے اور ا سکا معاملہ حد سے گزر ا ہوا ہے

Part 15:

  1. One must take care of relatives, poor and passenger.

Al Quran/alasraa/26/ And give to the near of kin his due and (to) the needy and the wayfarer, and do not squander wastefully.

  1. Measure right and honest

Al Quran/alasraa/35/ And give full measure when you measure, and weigh with a balance that is straight. That is good (advantageous) and better in the end.

  1. Stop and don’t follow rumors

AL Quran/ alasraa/36/ And follow not that of which you have not the knowledge; surely the hearing and the sight and the heart, all of these, shall be questioned about that.

  1. Be humble and abandon pride

Al Quran/ alasraa/37/ And walk not on the earth with conceit and arrogance. Verily, you can neither rend nor penetrate the earth, nor can you attain a stature like the mountains in height.

  1. Be positive, negativity brings many wrongs

Al Quran/ alasraa/53/ And say to My servants (that) they speak that which is best; surely the Shaitan sows dissensions among them; surely the Shaitan is an open enemy to man

6.Keep a good company

Al Quran/ alkahaf/28/ And withhold yourself with those who call on their Lord morning and evening desiring His goodwill, and let not your eyes pass from them, desiring the beauties of this world’s life; and do not follow him whose heart We have made unmindful to Our remembrance, and he follows his low desires and his case is one in which due bounds are exceeded.